!!!شاعری۔۔۔ سنو تم

 

سنو تم خاموش ہی رہنا

،بولتا تمہاری آنکھ کا کاجل ہے

 

سنو تم بدذوق ہی پی لینا

،میں نے  چُرایا ذائقہ تمہاری چائے کا ہے

 

سنو تم اُدھار مت لینا

،خواہ مخواہ احسان ہوتا ہے

 

سنو تم ہم نفس ہو میرے

،تم نے بانٹی مجھ سے اپنی تنہائی ہے

 

ہاں قید لازم ہے مجھ پر

میں نے چُرایا تمہاری نظموں کا رنگ ہے۔

 

خوش بخت اِقبال

45214724_1070578196485801_4171401731139174400_n.jpg